Punjab utility-allowance 68

پنجاب کے سرکاری اسکولوں میں ب فارم جمع نہ کرانے پر 40 ہزار طلبہ کو فارغ کر دیا

لاہور (ٹاپ اردو پوائنٹ) پنجاب کے سرکاری سکولوں سے 40 ہزار طلبہ کو صرف (ب) فارم جمع کرانے پر سکولوں سے فارغ کرنے کا معاملہ، مسلم لیگ(ن) نے معاملہ پنجاب اسمبلی میں اٹھادیا، مسلم لیگ(ن) کی رکن حناپرویز بٹ نے پیف کے اقدام کےخلاف پنجاب اسمبلی میں قرارداد جمع کرادی،پنجاب ایجوکیشن فاﺅنڈیشن نے (ب)فارم جمع نہ کرانے پر 40 ہزار بچو ں کو سکولوں سے نکال دیا ہے، پیف نے ( ب) فارم کی عدم دستیابی پر پیف نے بچوں کی فیسوں کی ادائیگیاں بند کر دیں، پیف کے پارٹنر سکولوں سے پہلی تاپانچویں جماعت تک کے طلبہ کوسکولوں سے نکال دیا ہے،متن کورونا اور مسلسل لاک ڈاﺅن کے باعث پہلے لاکھوں بچے سکول چھوڑ چکے ہیں، پنجاب ایجوکیشن فاﺅنڈیشن کا یہ فیصلہ تعلیم دششمنی کے زمرے میں آتاہے، 40 ہزار بچوں کو بغیر نوٹس کے سکولوں سے نکالنا انتہائی باقابل تشویش ہے، پنجاب حکومت پیف کے غیر سنجیدہ اقدام پر فوری ایکشن لے، بچوں کو (ب) فارم بنانے کی مہلت دی جائے:مطالبہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں